A village in Africa where women have to do to have children?

 یہ دنیا ایک ایسا عجائب گھر ہے جہاں طرح طرح کی مخلوق بستی ہے۔  یہاں ایسی
 بھی مخلوق بستی ہے جو ہر جزیرے ، ہر براعظم میں زندگی کو ایک الگ نظریے سے دیکھتی ہے اور اپنے اصولوں پر زندگی گزارنے کی خواہش مند ہے۔ اس مخلوق کا نام ہے انسان۔
A village in Africa where women have to do to have children?

 آج ہم افریقہ کے ایسے دیہات کی بات کریں گے جہاں کے لوگوں کا رہن سہن دیکھ کر باقی دنیا حیرت کی تصویر بنی ہوئی ہے۔ اس گاؤں کا نام ہے "مافی ڈوو" یہ افریقہ کا ایک ایسا دیہات ہے جہاں کی کل آبادی پانچ ہزار افراد پر مشتمل ہے. آخر اس گاؤں میں ایسی کیا بات ہے کہ اس گاؤں کو دیکھ کر باقی دنیا حیرت میں پڑی ہوئی ہے.
 

( First thing ) پہلی بات


 اس گاؤں میں موجود پانچ ہزار افراد میں سے کوئی بھی ایک اس گاؤں میں کے اندر پیدا نہیں ہوا۔

( Second thing ) دوسری بات

 اس گاؤں کے اندر کوئی بھی قبرستان موجود نہیں ہے اگر کوئی مر جاتا ہے تو اس کا مردہ جسم دور دراز کے گاؤں میں دفنا دیا جاتا ہے۔ اور جب کوئی عورت حاملہ ہو جاتی ہے تو اس کا گاؤں کے اندر بچہ پیدا کرنے کی اجازت نہیں دی جاتی۔ عورت کو اس گاؤں سے دور بھیج دیا جاتا ہے بچہ پیدا ہوجانے کے بعد وہ عورت اپنے گاؤں میں واپس آ جاتی ہے۔
A village in Africa where women have to do to have children?

( The third thing ) تیسری بات

اس گاؤں کے اندر کوئی بھی شخص جانو نہیں رکھ سکتا۔ جی ہاں اس گاؤں کے اندر کسی کو کسی قسم کا جانور پالنے کی اجازت نہیں ہے۔ آخر کیوں ایسا کیوں ہے کہ کوئی یہاں پر بچہ پیدا نہیں کیا جاسکتا اور مرنے پر ان کو یہاں دفنایا نہیں جاسکتا اور کوئی فرد جانور نہیں رکھ سکتا؟؟ ان تمام تر کاموں کی وجہ صرف ایک ہے وہ یہ کہ ان لوگوں کا ماننا ہے کہ ہمارے دیوتا ہم سے ناراض ہو جاتے ہیں۔ اگر اس گاؤں میں کوئی عورت بچہ پیدا کر دے یا کوئی یہاں پر دفنا دیا جائے یا کوئی گاؤں والا جانور رکھ لے تو ہمارے دیوتا ہم سے ناراض ہو جاتے ہیں۔ اور ہم پر طرح طرح کے عذاب بھیج دیتے ہیں۔
A village in Africa where women have to do to have children?