( Scary tree ) خوفناک درخت۔ 

جب لکڑی کاٹنے والوں نے اک پر پرانا درخت کاٹا تو جب انھوں نے درخت کے اندر دیکھا تو انہیں اپنی آنکھوں پر یقین نہ آیا۔ درخت کاٹنے والوں کے لیے درخت کاٹنا ایک بورنگ کام سے زیادہ نہیں ہوتا۔ اور انہیں معلوم ہوتا ہے کہ ماسوائے درختوں کے گرتے ہوئے دیکھنے کے دن میں شاید انہیں کچھ اور دیکھنے کو ملے۔ یہ لوگ سارا دن درخت کاٹتے ہیں اور پھر ان کو پراسیسنگ پلانٹ پر لایا جاتا ہے۔ اس کے بعد ان درختوں کے تختے بنائے جاتے ہیں یا پھر کاغذ بنا دیا جاتا ہے۔  ان لوگوں کے لئے یہ کام روز مرہ کی روٹین بن جاتا ہے۔

Scary tree

 لیکن کسے معلوم تھا آج سب کام ان کی روٹین کے سے ہٹ کر ہونے والے ہیں۔ "جارج پیپر کو" ایک پیپر بنانے والی کمپنی ہے ان کا بنیادی مقصد لکڑی کے ذریعے کاغذ بنانا ہے۔ اس لیے انہیں بہت سارے درخت کاٹنے پڑتے ہیں تاکہ وہ کاغذ بنانے کے لیے مطلوبہ ہیں لکڑی حاصل کرسکیں۔
 ایک دن  ان کی ایک ٹیم درخت کاٹنے کے لئے جنگل میں گئی کہ  انہیں معلوم نہ تھا کہ کھوکھلے درخت کے اندر ان کا سرپرائز منتظرہو گا۔ ان لوگوں کا زیادہ تر مقصد "امریکن چیسٹ ٹری" کو کاٹنا ہوتا ہے. اس درخت کو اس انڈسٹری میں اس لیے بھی پسند کیا جاتا ہے کیونکہ یہ درخت عام درختوں کی نسبت چار گنا زیادہ رفتار سے بڑھتا ہے۔ اس وجہ سے اس قسم کے درختوں کو بے دریغ کاٹا جاتا رہا اور اب یہ ڈھونڈنے سے بھی نہیں ملتے۔ اس کی وجہ شہرت بھی ہے کہ یہ لکڑی نمی اور پانی سے خراب نہیں ہوتی۔ جب وہ درخت کاٹ رہے تھے تو انہیں جلد ہی یہ اندازہ ہوگیا کہ یہ درخت اندر سے خالی ہے۔ بالآخر اس درخت کو کاٹا گیا اور اس کے ٹکڑے کیے جانے لگے۔ مگر اسی وقت ان کو کھوکھلے درخت کے اندر کچھ عجیب سا نظر آیا۔ انہیں درخت کے تنے کے اندر کوئی عجیب سی چیز نظر آنے لگی۔ جس کے دانت ان کو نظر آرہے تھے۔ بظاہر یہ چیز ان کی طرف دیکھ رہی تھی۔ جسے وہ ان پر حملہ کرنے والی ہو۔ اس کے تیز دانت شکاری جانور کی طرح لگ رہے تھے۔ اس کے پنجے سامنے نظر آ رہے تھے۔
Scary tree

 یہ غور کرنے پر کتا لگ رہا تھا۔ ان کو یہ بات سمجھ نہ آئی کہ آخر یہ کتا اس کس طرح اس تنے کے  اندر آ گیا ہے۔ اور آخر کیوں اتنا خوفناک نظر آرہا ہے۔ بالآخر امریکہ کی ایک لیبارٹری نے اس پر تحقیق شروع کردی۔ کہ آخر معاملہ کیا ہے۔
 ایکسپرٹس کی ایک ٹیم نے اس پر جانچ پڑتال شروع کردی۔ اک بیالوجیسٹ نے یہ جواب نکالا کیوں کہ چیسٹنٹ ٹری کی لکڑی نمی اور پانی سے خراب نہیں ہوتی۔ اس لیے یہ لاش اس کے اندر خراب نہیں ہوئی۔ یہ لکڑی پانی اورکو اپنے اندر جذب کر لیتی ہے۔ اس لئے لاش تک پانی نہیں پہنچ سکا۔ اور وہ خراب نہیں ہوئی۔
 آخر یہ کتے کی لاش اس کے اندر کس طرح پہنچی؟؟
 اس کا کوئی خاطر خواہ جواب نہیں مل سکا۔ مگر ایک ماہر نے کہا کہ کیونکہ یہ کتا شکاری محسوس ہو رہا ہے۔ اس لیے یہ کسی گلہری کا تعاقب کرتے ہوئے درخت کے اوپر چڑھ گیا۔ اور درخت کھوکھلا ہونے کی وجہ سے یہ اندر گرا اور وہیں مر گیا۔
Scary tree